23 Jul 2018     ❗DAILY DARS E QURAN❗ ❗WATCH LIVE❗ 👉(Recitation, Translation & Short Tafseer starting from Surah Ahzaab Ayat 16) 👉Hafiz Syed Muhammad Haider Naqvi Sb. (KARWAN E QURAN) 👉Lectures will be held DAILY from Monday 23rd July 2018 to Monday 30th July 2018 👉At Masjid-e-Yasrab, DHA, Karachi 👉Timings: Soon after Namaz-e-Maqhribain 👉(Ladies & Gents) 👉 Live on KARWAN E QURAN Facebook Page: https://www.facebook.com/karwanequran

|   06 Jul 2018     ❗DAILY DARS E QURAN❗ ❗WATCH LIVE❗ 👉(Recitation, Translation & Short Tafseer starting from Surah Naml Ayat 59) 👉Hafiz Syed Muhammad Haider Naqvi Sb. (KARWAN E QURAN) 👉Lectures will be held DAILY from Friday 6th July 2018 to Thursday 12th July 2018 👉At Masjid-e-Yasrab, DHA, Karachi 👉Timings: Soon after Namaz-e-Maqhribain 👉(Ladies & Gents) 👉 Live on KARWAN E QURAN Facebook Page: https://www.facebook.com/karwanequran

|   02 Jul 2018     کاروان قرآن امتحان میں شرکت کرنے والے برادران و خواہران کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔ آپ سے درخواست ہے کہ انتظار فرمائیں ان شاء الله بہت جلد آپ کو سوالات کے صحیح جواب ارسال کر دیے جائیں گے اور نتائج کا اعلان بھی کر دیا جائے گا۔ اس سلسلہ میں بار بار رابطہ نہ کریں سب سے زیادہ نمبر لینے والے تین افراد کو زیارت اربعین کے لیے ہوائی ٹکٹ اور ویزا وغیرہ کے اخراجات ادا کیے جائیں گے جزاکم الله خیراً

|   30 Jun 2018     ❗کاروان قرآن امتحان میں شرکت کرنے والے برادران و خواہران توجہ فرمائیں❗ 👈 ۱۔ لاہور اور کراچی کے جن افراد کو پتہ (ایڈریس) بھیجا جا چکا ہے وہ امتحان شروع ہونے کے مقررہ وقت (تین بجے بعد دوپہر) سے کچھ دیر قبل وہاں پہنچ جائیں تا کہ پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے 👈 ۲۔ فیصل آباد اور گرد و نواح کے علاقوں کے افراد کا امتحان جامعہ بعثت رجوعہ سادات ضلع چنیوٹ میں منعقد کیا جائے گا 👈 ۳۔ دیگر شہروں سے تعلّق رکھنے والے افراد کے امتحان کا وقت بھی تین بجے بعد دوپہر ہے۔ مزید تفصیلات واٹس ایپ کے ذریعہ آپ کو بھیج دی جائیں گی جزاکم الله خیراً

|   28 Jun 2018     ❗ضروری اعلان❗ کاروان قرآن کے پروگرام “قرآن سے امام ع تک” کے 👈 1 جولائی 2018 بروز اتوار 👉 کو منعقد ہونے والے امتحان میں شرکت کے لیے جن افراد نے ابھی تک اپنا نام اور شہر لکھ کر اس نمبر (923217700647+) پر WhatsApp کے ذریعہ نہیں بھیجا ان سے گزارش ہے کہ جلد از جلد بھیج دیں! بصورت دیگر امتحان میں شرکت ممکن نہیں ہو گی جزاکم الله خیراً

Al-Waqi'ah

Translation:

بِسْمِ اللہِ الرَّحْمَـٰنِ الرَّحِيمِ
بنام خدائے رحمن رحیم
إِذَا وَقَعَتِ الْوَاقِعَةُ
جب ہونے والا واقعہ ہو چکے گا۔
56:1
لَيْسَ لِوَقْعَتِهَا كَاذِبَةٌ
تو اس کے وقوع کو جھٹلانے والا کوئی نہ ہو گا۔
56:2
خَافِضَةٌ رَافِعَةٌ
وہ تہ و بالا کرنے والا (واقعہ) ہو گا۔
56:3
إِذَا رُجَّتِ الْأَرْضُ رَجًّا
جب زمین پوری طرح ہلا دی جائے گی،
56:4
وَبُسَّتِ الْجِبَالُ بَسًّا
اور پہاڑ ریزہ ریزہ کر دیے جائیں گے،
56:5
فَكَانَتْ هَبَاءً مُنْبَثًّا
تو یہ منتشر غبار بن کر رہ جائیں گے،
56:6
وَكُنْتُمْ أَزْوَاجًا ثَلَاثَةً
اور تم تین گروہوں میں بٹ جاؤ گے۔
56:7
فَأَصْحَابُ الْمَيْمَنَةِ مَا أَصْحَابُ الْمَيْمَنَةِ
رہے داہنے ہاتھ والے تو داہنے ہاتھ والوں کا کیا کہنا۔
56:8
وَأَصْحَابُ الْمَشْأَمَةِ مَا أَصْحَابُ الْمَشْأَمَةِ
اور رہے بائیں ہاتھ والے تو بائیں ہاتھ والوں کا کیا پوچھنا۔
56:9
وَالسَّابِقُونَ السَّابِقُونَ
اور سبقت لے جانے والے تو آگے بڑھنے والے ہی ہیں۔
56:10
أُولَٰئِكَ الْمُقَرَّبُونَ
یہی وہ مقرب لوگ ہیں۔
56:11
فِي جَنَّاتِ النَّعِيمِ
نعمتوں سے مالا مال جنتوں میں ہوں گے۔
56:12
ثُلَّةٌ مِنَ الْأَوَّلِينَ
ایک جماعت اگلوں میں سے۔
56:13
وَقَلِيلٌ مِنَ الْآخِرِينَ
اور تھوڑے لوگ پچھلوں میں سے ہوں گے۔
56:14
عَلَىٰ سُرُرٍ مَوْضُونَةٍ
جواہر سے مرصع تختوں پر،
56:15
مُتَّكِئِينَ عَلَيْهَا مُتَقَابِلِينَ
تکیے لگائے آمنے سامنے بیٹھے ہوں گے۔
56:16
يَطُوفُ عَلَيْهِمْ وِلْدَانٌ مُخَلَّدُونَ
ان کے گرد تا ابد رہنے والے لڑکے پھر رہے ہوں گے۔
56:17
بِأَكْوَابٍ وَأَبَارِيقَ وَكَأْسٍ مِنْ مَعِينٍ
(ہاتھوں میں) پیالے اور آفتابے اور صاف شراب کے جام لیے،
56:18
لَا يُصَدَّعُونَ عَنْهَا وَلَا يُنْزِفُونَ
جس سے انہیں نہ سر کا درد ہو گا اور نہ ان کی عقل میں فتور آئے گا،
56:19
وَفَاكِهَةٍ مِمَّا يَتَخَيَّرُونَ
اور طرح طرح کے میوے لیے جنہیں وہ پسند کریں،
56:20
وَلَحْمِ طَيْرٍ مِمَّا يَشْتَهُونَ
اور پرندوں کا گوشت لیے جس کی وہ خواہش کریں،
56:21
وَحُورٌ عِينٌ
اور خوبصورت آنکھوں والی حوریں ہوں گی،
56:22
كَأَمْثَالِ اللُّؤْلُؤِ الْمَكْنُونِ
جو چھپا کر رکھے گئے موتیوں کی طرح (حسین) ہوں گی۔
56:23
جَزَاءً بِمَا كَانُوا يَعْمَلُونَ
یہ ان اعمال کی جزا ہے جو وہ کرتے رہے ہیں۔
56:24
لَا يَسْمَعُونَ فِيهَا لَغْوًا وَلَا تَأْثِيمًا
وہاں وہ نہ بیہودہ کلام سنیں گے اور نہ ہی گناہ کی بات۔
56:25
إِلَّا قِيلًا سَلَامًا سَلَامًا
ہاں ! سلام سلام کہنا ہو گا۔
56:26
وَأَصْحَابُ الْيَمِينِ مَا أَصْحَابُ الْيَمِينِ
اور داہنے ہاتھ والے تو داہنے والوں کا کیا کہنا ،
56:27
فِي سِدْرٍ مَخْضُودٍ
وہ بے خار بیریوں میں،
56:28
وَطَلْحٍ مَنْضُودٍ
اور کیلوں کے گچھوں،
56:29
وَظِلٍّ مَمْدُودٍ
اور لمبے سایوں،
56:30
وَمَاءٍ مَسْكُوبٍ
اور بہتے پانیوں،
56:31
وَفَاكِهَةٍ كَثِيرَةٍ
اور فراوان پھلوں میں ہوں گے،
56:32
لَا مَقْطُوعَةٍ وَلَا مَمْنُوعَةٍ
جو نہ ختم ہوں گے اور نہ ان پر کوئی روک ٹوک ہو گی۔
56:33
وَفُرُشٍ مَرْفُوعَةٍ
اور اونچے فرش ہوں گے۔
56:34
إِنَّا أَنْشَأْنَاهُنَّ إِنْشَاءً
ہم نے ان (حوروں) کو ایک انداز تخلیق سے پیدا کیا۔
56:35
فَجَعَلْنَاهُنَّ أَبْكَارًا
پھر ہم نے انہیں باکرہ بنایا۔
56:36
عُرُبًا أَتْرَابًا
ہمسر دوست، ہم عمر بنایا۔
56:37
لِأَصْحَابِ الْيَمِينِ
(یہ سب) داہنے والوں کے لیے۔
56:38
ثُلَّةٌ مِنَ الْأَوَّلِينَ
ایک جماعت اگلوں میں سے ہو گی،
56:39
وَثُلَّةٌ مِنَ الْآخِرِينَ
اور ایک جماعت پچھلوں میں سے۔
56:40
وَأَصْحَابُ الشِّمَالِ مَا أَصْحَابُ الشِّمَالِ
رہے بائیں والے تو بائیں والوں کا کیا پوچھنا۔
56:41
فِي سَمُومٍ وَحَمِيمٍ
وہ جلتی ہوا اور کھولتے پانی میں،
56:42
وَظِلٍّ مِنْ يَحْمُومٍ
اور سیاہ دھوئیں کے سائے میں ہوں گے،
56:43
لَا بَارِدٍ وَلَا كَرِيمٍ
جس میں نہ خنکی ہے اور نہ راحت۔
56:44
إِنَّهُمْ كَانُوا قَبْلَ ذَٰلِكَ مُتْرَفِينَ
یہ لوگ اس سے پہلے ناز پروردہ تھے،
56:45
وَكَانُوا يُصِرُّونَ عَلَى الْحِنْثِ الْعَظِيمِ
اور گناہ عظیم پر اصرار کرتے تھے،
56:46
وَكَانُوا يَقُولُونَ أَئِذَا مِتْنَا وَكُنَّا تُرَابًا وَعِظَامًا أَإِنَّا لَمَبْعُوثُونَ
اور کہا کرتے تھے: کیا جب ہم مر جائیں گے اور خاک اور ہڈیاں بن جائیں گے تو کیا ہم دوبارہ اٹھائے جائیں گے؟
56:47
أَوَآبَاؤُنَا الْأَوَّلُونَ
اور کیا ہمارے اگلے باپ دادا بھی؟
56:48
قُلْ إِنَّ الْأَوَّلِينَ وَالْآخِرِينَ
کہدیجیے: اگلے اور پچھلے یقینا،
56:49
لَمَجْمُوعُونَ إِلَىٰ مِيقَاتِ يَوْمٍ مَعْلُومٍ
ایک مقررہ دن مقررہ وقت پر جمع کیے جائیں گے۔
56:50
ثُمَّ إِنَّكُمْ أَيُّهَا الضَّالُّونَ الْمُكَذِّبُونَ
پھر یقینا تم اے گمراہو! تکذیب کرنے والو!
56:51
لَآكِلُونَ مِنْ شَجَرٍ مِنْ زَقُّومٍ
زقوم کے درخت میں سے کھانے والے ہو۔
56:52
فَمَالِئُونَ مِنْهَا الْبُطُونَ
پھر اس سے پیٹ بھرنے والے ہو۔
56:53
فَشَارِبُونَ عَلَيْهِ مِنَ الْحَمِيمِ
پھر اس پر کھولتا ہوا پانی پینے والے ہو۔
56:54
فَشَارِبُونَ شُرْبَ الْهِيمِ
پھر وہ بھی اس طرح پینے والے ہو جیسے پیاسے اونٹ پیتے ہیں۔
56:55
هَٰذَا نُزُلُهُمْ يَوْمَ الدِّينِ
جزا کے دن یہ ان کی ضیافت ہو گی۔
56:56
نَحْنُ خَلَقْنَاكُمْ فَلَوْلَا تُصَدِّقُونَ
ہم ہی نے تمہیں پیدا کیا ہے، پھر تم تصدیق کیوں نہیں کرتے ؟
56:57
أَفَرَأَيْتُمْ مَا تُمْنُونَ
یہ تو بتاؤ کہ جس نطفے کو تم (رحم میں) ڈالتے ہو،
56:58
أَأَنْتُمْ تَخْلُقُونَهُ أَمْ نَحْنُ الْخَالِقُونَ
کیا اس (انسان) کو تم بناتے ہو یا بنانے والے ہم ہیں؟
56:59
نَحْنُ قَدَّرْنَا بَيْنَكُمُ الْمَوْتَ وَمَا نَحْنُ بِمَسْبُوقِينَ
ہم ہی نے موت کو تمہارے لیے مقدر کر رکھا ہے اور ہم عاجز نہیں ہیں،
56:60
عَلَىٰ أَنْ نُبَدِّلَ أَمْثَالَكُمْ وَنُنْشِئَكُمْ فِي مَا لَا تَعْلَمُونَ
کہ تمہاری شکلوں کو تبدیل کر کے تمہیں ایسی شکلوں میں پیدا کریں جنہیں تم نہیں پہچانتے۔
56:61
وَلَقَدْ عَلِمْتُمُ النَّشْأَةَ الْأُولَىٰ فَلَوْلَا تَذَكَّرُونَ
اور بتحقیق پہلی پیدائش کو تم جان چکے ہو، پھر تم عبرت حاصل کیوں نہیں کرتے؟
56:62
أَفَرَأَيْتُمْ مَا تَحْرُثُونَ
یہ تو بتاؤ کہ جو کچھ تم بوتے ہو،
56:63
أَأَنْتُمْ تَزْرَعُونَهُ أَمْ نَحْنُ الزَّارِعُونَ
اسے تم اگاتے ہو یا اسے اگانے والے ہم ہیں؟
56:64
لَوْ نَشَاءُ لَجَعَلْنَاهُ حُطَامًا فَظَلْتُمْ تَفَكَّهُونَ
اگر ہم چاہیں تو اسے ریزہ ریزہ کر دیں پھر تم حیرت زدہ،بڑ بڑاتے رہ جاؤ،
56:65
إِنَّا لَمُغْرَمُونَ
کہ ہم پر تو تاوان پڑ گیا،
56:66
بَلْ نَحْنُ مَحْرُومُونَ
بلکہ ہم تو محروم رہ گئے۔
56:67
أَفَرَأَيْتُمُ الْمَاءَ الَّذِي تَشْرَبُونَ
یہ تو بتاؤ کہ جو پانی تم پیتے ہو،
56:68
أَأَنْتُمْ أَنْزَلْتُمُوهُ مِنَ الْمُزْنِ أَمْ نَحْنُ الْمُنْزِلُونَ
اسے بادلوں سے تم برساتے ہو یا اس کے برسانے والے ہم ہیں؟
56:69
لَوْ نَشَاءُ جَعَلْنَاهُ أُجَاجًا فَلَوْلَا تَشْكُرُونَ
اگر ہم چاہیں تو اسے کھارا بنا دیں پھر تم شکر کیوں نہیں کرتے ؟
56:70
أَفَرَأَيْتُمُ النَّارَ الَّتِي تُورُونَ
یہ تو بتاؤ کہ جو آگ تم سلگاتے ہو،
56:71
أَأَنْتُمْ أَنْشَأْتُمْ شَجَرَتَهَا أَمْ نَحْنُ الْمُنْشِئُونَ
اس کے درخت کو تم نے پیدا کیا یا اس کے پیدا کرنے والے ہم ہیں؟
56:72
نَحْنُ جَعَلْنَاهَا تَذْكِرَةً وَمَتَاعًا لِلْمُقْوِينَ
ہم ہی نے اس (آگ) کو یاد دہانی کا ذریعہ اور ضرورت مندوں کے لیے سامان زندگی بنایا۔
56:73
فَسَبِّحْ بِاسْمِ رَبِّكَ الْعَظِيمِ
پس اپنے عظیم رب کے نام کی تسبیح کرو۔
56:74
فَلَا أُقْسِمُ بِمَوَاقِعِ النُّجُومِ
میں قسم کھاتا ہوں ستاروں کے مقامات کی۔
56:75
وَإِنَّهُ لَقَسَمٌ لَوْ تَعْلَمُونَ عَظِيمٌ
اور اگر تم سمجھو تو یہ یقینا بہت بڑی قسم ہے
56:76
إِنَّهُ لَقُرْآنٌ كَرِيمٌ
کہ یہ قرآن یقینا بڑی تکریم والا ہے،
56:77
فِي كِتَابٍ مَكْنُونٍ
جو ایک محفوظ کتاب میں ہے،
56:78
لَا يَمَسُّهُ إِلَّا الْمُطَهَّرُونَ
جسے صرف پاکیزہ لوگ ہی چھو سکتے ہیں۔
56:79
تَنْزِيلٌ مِنْ رَبِّ الْعَالَمِينَ
یہ عالمین کے پروردگار کی طرف سے نازل کردہ ہے۔
56:80
أَفَبِهَٰذَا الْحَدِيثِ أَنْتُمْ مُدْهِنُونَ
کیا تم اس کلام کے ساتھ بے اعتنائی برتتے ہو؟
56:81
وَتَجْعَلُونَ رِزْقَكُمْ أَنَّكُمْ تُكَذِّبُونَ
اور تم تکذیب کرنے کو ہی اپنا حصہ قرار دیتے ہو؟
56:82
فَلَوْلَا إِذَا بَلَغَتِ الْحُلْقُومَ
پس جب روح حلق تک پہنچ چکی ہوتی ہے،
56:83
وَأَنْتُمْ حِينَئِذٍ تَنْظُرُونَ
اور تم اس وقت دیکھ رہے ہوتے ہو،
56:84
وَنَحْنُ أَقْرَبُ إِلَيْهِ مِنْكُمْ وَلَٰكِنْ لَا تُبْصِرُونَ
اور (اس وقت) تمہاری نسبت ہم اس شخص (مرنے والے) کے زیادہ قریب ہوتے ہیں لیکن تم نہیں دیکھ سکتے۔
56:85
فَلَوْلَا إِنْ كُنْتُمْ غَيْرَ مَدِينِينَ
پس اگر تم کسی کے زیر اثر نہیں ہو،
56:86
تَرْجِعُونَهَا إِنْ كُنْتُمْ صَادِقِينَ
اور تم اپنی اس بات میں سچے ہو تو (اس نکلی ہوئی روح کو) واپس کیوں نہیں لے آتے؟
56:87
فَأَمَّا إِنْ كَانَ مِنَ الْمُقَرَّبِينَ
پھر اگر وہ (مرنے والا) مقربین میں سے ہے
56:88
فَرَوْحٌ وَرَيْحَانٌ وَجَنَّتُ نَعِيمٍ
تو (اس کے لیے) راحت اور خوشبودار پھول اور نعمت بھری جنت ہے۔
56:89
وَأَمَّا إِنْ كَانَ مِنْ أَصْحَابِ الْيَمِينِ
اور اگر وہ اصحاب یمین میں سے ہے
56:90
فَسَلَامٌ لَكَ مِنْ أَصْحَابِ الْيَمِينِ
تو (اس سے کہا جائے گا) تجھ پر اصحاب یمین کی طرف سے سلام ہو۔
56:91
وَأَمَّا إِنْ كَانَ مِنَ الْمُكَذِّبِينَ الضَّالِّينَ
اور اگر وہ (مرنے والا) تکذیب کرنے والے گمراہوں میں سے ہے،
56:92
فَنُزُلٌ مِنْ حَمِيمٍ
تو (اس کے لیے) کھولتے پانی کی ضیافت ہے۔
56:93
وَتَصْلِيَةُ جَحِيمٍ
اور بھڑکتی آگ میں تپایا جانا ہے۔
56:94
إِنَّ هَٰذَا لَهُوَ حَقُّ الْيَقِينِ
یہ سب سراسر حق پر مبنی قطعی ہے۔
56:95
فَسَبِّحْ بِاسْمِ رَبِّكَ الْعَظِيمِ
پس (اے نبی) اپنے عظیم رب کے نام کی تسبیح کیجیے۔
56:96